IQNA

17:41 - September 10, 2018
خبر کا کوڈ: 3505079
بین الاقوامی گروپ: چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے فوجی عدالتوں سے سزائے موت پانے والے 13 خطرناک دہشت گردوں کی سزا کی توثیق کردی۔

ایکنا نیوز- ڈان نیوز کے مطابق پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق یہ تکفیری دہشت گرد مسلح افواج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں، تعلیمی اداروں اور معصوم شہریوں پر حملوں سمیت دہشت گردی کی کئی وارداتوں میں ملوث تھے۔

مجموعی طور پر دہشت گرد 202 افراد کے قتل عام میں ملوث تھے جن میں 51 سیکیورٹی اہلکار اور 151 عام شہری شامل تھے، جبکہ دہشت گرد حملوں میں 249 افراد زخمی بھی ہوئے۔

بیان میں کہا گیا کہ دہشت گردوں کا خصوصی فوجی عدالتوں میں ٹرائل کیا گیا، جبکہ ان کے قبضے سے اسلحہ اور بارودی مواد بھی برآمد کیا گیا تھا۔

اس کے علاوہ آرمی چیف نے فوجی عدالتوں سے مختلف عرصے کی قید کی سزا پانے والے مجرمان کی سزاؤں کی بھی توثیق کی۔

جن دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کی گئی ان میں منیر رحمٰن، محمد بشیر، حافظ عبداللہ، بخت اللہ خان، شاہ خان، محمد سہیل خان، داؤد شاہ، محمد منیر، حبیب اللہ، محمد آصف، گل شاہ، جلال حسین اور علی شیر شامل ہیں۔

تمام مجرمان نے مجسٹریٹ کے سامنے اپنے جرائم کا اعتراف کیا تھا۔

دہشت گردوں پر مجموعی طور پر 4 شہریوں اور 41 سیکیورٹی اہلکاروں کے قتل اور 103 کو زخمی کرنے کا الزام تھا، جبکہ ان کے قبضے سے اسلحہ و بارودی مواد بھی برآمد کیا گیا تھا۔

قبل ازیں 13 جولائی کو بھی جنرل قمر جاوید باجوہ نے معصوم لوگوں کو دہشت گردی کا نشانہ بنانے والےبارہ دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کی تھی۔

نام:
ایمیل:
* رایے: