IQNA

7:33 - March 13, 2022
خبر کا کوڈ: 3511488
پاکستان کے شہر پشاور کی شیعہ جامع مسجد میں نمازیوں پر ہونے والے دہشتگردانہ حملے میں شہید ہونے والوں کے ایصال ثواب کے لئے امام رضا علیہ السلام کے حرم مطہر میں قرآن خوانی اور مجلس ترحیم منعقد کی گئی۔

آستان قدس رضوی نیوز- گذشتہ چار مار چ  کو  پاکستان  کے شہر پشاور کے قصہ خوانی بازار کی شیعہ مسلمانوں کی  مسجد امامیہ میں نماز جمعہ کے دوران  سامراجی طاقتوں کے آلہ کار دہشت گردوں نے  خود کش دہشت گردانہ حملہ  کرکے   تقریباً 66  نمازیوں کو شہید کردیا تھا  جن میں بچے بھی شامل تھے اس سفاکانہ اور دہشت گردانہ حملے میں دوسو نمازی زخمی بھی ہوئے تھے  
سانحہ  پشاور کے شہدا کے ایصال  ثواب  کے لئے  اسلامی جمہوریہ ایران کے مختلف شہروں میں  مجالس ترحیم کا انعقاد کیا گیا  اورمراجع عظام و علمائے کرام کی جانب سے دہشتگردی کے اس واقعے کی پرزور مذمت  کی گئي ۔
سانحہ پشاور کے  شہدا کی یاد اور ان  کے ایصال ثواب کے لئے  12 مارچ، 2022  کو حرم امام رضا علیہ السلام کی انتظامیہ کی  جانب سے نماز مغربین کے بعد  امام رضا علیہ السلام کے حرم مطہر کے رواق  امام خمینیؒ میں قرآن خوانی اور مجلس ترحیم  کا انعقاد کیا گیا جس میں مختلف ممالک سے تعلق رکھنے والے زائرین و مجاورین نے بھرپور شرکت کی۔
اس پروگرام میں حرم امام رضا علیہ السلام کے متولی حجت الاسلام والمسلمین احمد مروی ،عالمی اسمبلی اہلبیت (ع) کے جنرل سیکرٹری آیت اللہ رضا رمضانی اور کئی دیگر مذہبی و سیاسی و سماجی شخصیات نے بھی شرکت کی 
پروگرام کے آغاز میں بین الاقوامی قاریان قرآن علی رضا رضایی اور جواد قاسمی نے قرآن کریم کی تلاوت کی جس کے بعد سانحہ پشاور  کے بارے میں حرم مطہر کے متولی حجت الاسلام مروی کا   بیان اردو زبان زائرین کے لئے اردو زبان میں پڑھا گیا جس میں انہوں نے   بڑی تعداد میں نمازیوں کی شہادت  پر دلی افسوس کا اظہار کرتے ہوئے سوگوار لواحقین کو تعزیت  پیش کی اور سانحہ پشاور کی مذمت کی   ۔
ایران کے مشہورمداح  اور نوحہ خوان جناب واعظ واعظی نے مرثیہ  اور نوحہ خوانی  کی اور پروگرام کے اختتام پر عالمی اسمبلی اہلبیت(ع) کے جنرل سیکرٹری آیت اللہ رضا رمضان نے مجلس کو خطاب کیا ۔
یہاں یہ بات قابل ذکر ہے  کہ شہدائے پشاور کے ہفتم کی مناسبت سے  بھی  حرم امام رضا(ع) کے رواق غدیر میں   قرآن خوانی اور مجلس ایصال ثواب برپا کی گئي تھی ۔

نام:
ایمیل:
* رایے:
* captcha: